یوکرین کی صورتحال پر سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس آج ہوگا

روس اور یوکرین کے درمیان کشیدگی پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس آج بلایا گیا۔سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ انتونیو گوٹریس کا کہنا ہے کہ صدر پیوٹن امن کو موقع دیں۔

سلامتی کونسل کاہنگامی اجلاس یوکرین کی درخواست پر بلایا گیا ۔سیکریٹری جنرل اقوامِ متحدہ انتونیو گوٹریس نے روس سے امن کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ پیوٹن اپنی فوج کو یوکرین پر حملے سے روکے۔روسی سفیر برائے اقوامِ متحدہ کا کہنا ہے کہ اقوامِ متحدہ کے چارٹر کے آرٹیکل اکاون کے تحت روس کا آپریشن درست ہے۔

دوسری جانب یوکرین کے سفیر برائے اقوام متحدہ نے سلامتی کونسل میں بیان دیا ہے کہ روس کو جنگ سے روکنا اقوامِ متحدہ کی سلامتی کونسل کی ذمے داری ہے۔امریکی سفیربرائےیواین کا نے کہا کہ ہم امن کے خواہاں ہیں جبکہ پیوٹن نے جنگ کا پیغام دیا ہے۔برطانوی سفیرنے کہا کہ مشرقی یوکرین میں روسی فوجی کارروائی بلا اشتعال اور بلا جواز ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More