وزیراعظم نے مئی تک لوڈشیڈنگ میں نمایاں کمی کرنے کا حکم دے دیا

اسلام آباد: وزیراعظم شہبازشریف کا ملک میں بجلی کی لوڈشیڈنگ میں اضافے اور عوام کی مشکلات پر برہمی کا اظہار، وزیراعظم نے مئی کے مہینے تک لوڈشیڈنگ میں نمایاں کمی کرنے کا حکم دے دیا۔

وزیراعظم کی ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کرنے کی سخت ہدایت کی ہے۔ وزیر آعظم نے کہا ہے کہ عوام کو جب تک اس عذاب سے نجات نہیں ملتی نہ خود چین سے بیٹھوں گا نہ کسی کو بیٹھنے دوں گا۔

وزیراعظم نے ہدایات جاری کی ہے کہ سابق حکومت کی مجرمانہ غفلت کی پیدا کردہ تکلیف سے شہریوں کو بچانے کی ہر ممکن کوشش کریں۔ تیل وگیس کا بندوبست ہونے تک عبوری اقدامات کو بہتر بنایا جائے۔ بروقت ایندھن خریدا گیا، نہ کارخانوں کی مرمت کی گئی۔

انہوں نے کہا کہ عمران حکومت نے ہمارے دور کے سستی اور تیز ترین بجلی پیدا کرنے والے پلانٹ بند کئے۔ اس ظلم کی قیمت قوم کوہر ماہ 100 ارب روپے کی شکل میں ادا کرنا پڑرہی ہے۔ 6 ارب میں ایل این جی کا جو ایک جہاز مل رہا تھا، وہ قوم کو20 ارب میں پڑ رہا ہے۔

وزیراعظم شہبازشریف نے کہا عمران حکومت کا یہ ظلم قوم کو اس سال 500 ارب سے زائد میں پڑے گا۔ توانائی کے شعبے کی تباہی کرکے پاکستان کی معیشت دیوالیہ کرنے کی سازش کی گئی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More