عدالتیں خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہیں، فواد چوہدری

لاہور: پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنما اور سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری نے کہا ہے کہ جس نے نواز شریف اور شہباز شریف کےکیسز کی تفتیش کی انہیں چن چن کر نشانہ بنایا جارہاہے، ہماری عدالتیں خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہیں۔

لاہور میں وکلاء سے خطاب میں فواد چوہدری نے کہا کہ فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ کوئی بھی تحریک وکلا کے بغیر کامیاب نہیں ہوسکتی، 18مئی کو ایوان اقبال میں وکلا کا بڑاکنونشن ہوگا۔

فواد چوہدری نے کہا کہ حکومتوں کا یہ کام نہیں کہ بار کی حیثیت ختم کردیں، عدالتیں اگر ایک پارٹی کے لیے رات 12 بجے کھل جائیں تو عدالتوں کا کردار مجروح ہوتا ہے، ایسے عوام کا انصاف سے اعتبار اٹھ جاتاہے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان جو جدوجہد کر رہے ہیں، وہ حقوق اور آزادی کی لڑائی ہے، آج وکلا مایوس ہیں، عمران خان سے ملنا چاہتےہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ ہم نے جو رکن منتخب وہ حقیقی معانی میں نمائندگی نہیں کرسکے، ڈاکٹر فروغ نسیم اس انداز میں اصلاحات نہیں لاسکے جو امیدیں تھیں۔

فواد چوہدری نے یہ بھی کہا کہ شہباز شریف اور حمزہ شہباز ڈھائی سال سے عبوری ضمانت پر ہیں، ابھی حلف نہیں لیا تھا ایک دن پہلے آکر اپنی پوری انویسٹی گیشن ٹیم کو تبدیل کیا۔

انہوں نے کہا کہ بہت جلد پاکستان میں عام انتخابات ہونے جارہے ہیں، انتخابات جیتنے کے بعد تحریک انصاف کا پہلا کام جوڈیشل اصلاحات ہوگا۔

اُن کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر رضوان کو دل کا دورہ پریشر کی وجہ سے پڑا، آیان علی کا تفتیشی ماراگیا، جو بھی ان کے کیسز کی انویسٹی گیشن کر رہا ہے، اس کے ساتھ ایسا ہی ہو رہا ہے ۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More