کالعدم ٹی ایل پی عسکریت پسند تنظیم ہے، شیخ رشید

اسلام آباد: وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ پنجاب میں امن وامان قائم کرنے اور کالعدم تنظیم سے نمٹنے کے لیے صوبے میں 60 روز کے لیے رینجرز تعینات کر رہے ہیں۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ کالعدم ٹی ایل پی والوں سے 6 مرتبہ رابطے کیے۔ان کی قیادت سے کافی مذاکرات کیے لیکن اب یہ تنظیم عسکریت پسند ہوچکی ہے۔ لاہور سمیت پنجاب بھر میں امن وامان قائم کرنے کا اختیار 60 دن کے لیے رینجرز کے حوالے کر رہے ہیں۔

وفاقی وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ ہم چاہتے ہیں کہ ملک میں امن ہو۔پاکستان پر کافی دباؤ ہے۔ خدشہ ہےکہ کالعدم قراردی گئی تنظیم عالمی دہشت گردتنظیموں میں نہ آجائے پھر ان کےکیسزہمارے بس میں نہیں ہوں گے۔ فرانس کاسفیرپاکستان میں نہیں ہے۔ فرانس کاسفارتخانہ بند نہیں کرسکتے۔

ان کاکہنا تھا کہ سادھوکی کے قریب ٹی ایل پی کے کارکنوں کے حملے میں 3 پولیس اہلکار شہید اور 70 سےزائد اہلکار زخمی ہوئے ہیں جن میں سے 8 اہلکاروں کی حالت تشویشناک ہے۔کالعدم تنظیم نے راستے کھولنے کا وعدہ پورا نہیں کیا لیکن میں اپنے وعدے پر قائم ہوں یہ خاموشی سے واپس چلے جائیں۔

شیخ رشید احمد نے مولانافضل الرحمان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ مولانافضل الرحمان صاحب حکومت کہیں نہیں جارہی ہے ۔ ملک کی خاطر اس مسئلے کی سنجیدگی کو سمجھنے کی کوشش کریں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More