افغان طالبان کا مخالف اتحاد بنانے کی کوشش

افغانستان کے چند معروف سیاست دان افغانستان کے مستقبل کے حوالے سے ایک نیا اتحاد بنانے کے مقصد سے ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں موجود ہیں۔ ایسا افغانستان پر طالبان کے اقتدار سنبھالنے کے بعد پہلی مرتبہ کیا جا رہا ہے۔

غیرملکی خبرایجنسی کے مطابق ازبک جنگجو سردار اور سابق نائب صدر مارشل عبدالرشید دوستم انقرہ میں اپنے گھر میں اس ملاقات کی میزبانی کر رہے ہیں۔ یہ ملاقات کئی دن تک جاری رہے گی۔ اس ملاقات میں پشتونوں کے سوا دیگر تمام نسلی گروہوں سے تعلق رکھنے والے رہنما شامل ہیں۔ طالبان مخالف سوچ رکھنے والے ان رہنماؤں میں جہادی لیڈرعبدالرؤف سیف، ہزارہ برادری کے رہنما محمد محقق اور دیگر شخصیات شامل ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More