ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کی پلیئنگ کنڈیشنز میں کئی تبدیلیاں

دبئی: آئی سی سی نے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کی پلیئنگ کنڈیشنزمیں کئی تبدیلیاں کردی ہیں۔ یواے ای کی گرمی کے پیش نظرہراننگ کے درمیان ڈھائی منٹ کا وقفہ ہوگا۔ جس کے دوران ہیڈ کوچ کریزپرموجود بیٹرسے بات کرسکیں گے۔ پہلی بارڈی آر ایس استعمال کیا جائے گا۔ بارش سے متاثرہ گروپ میچ میں کم ازکم پانچ،سیمی فائنل اور فائنل میں دس اوورزکرانے لازمی ہوں گے۔

آئی سی سی نے ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے لیے خصوصی پلیئنگ کنڈیشنزکااعلان کردیا۔ یو اے ای کی گرمی کے پیش نظرہراننگ کےدرمیان ڈھائی منٹ کا پانی کاوقفہ ہوگا۔ جس کے دوران ہیڈ کوچ فیلڈ میں موجود پلیئرزسے بات کرسکیں گے۔ اس قسم کا وقفہ مختلف لیگزمیں اسٹریجک ٹائم آؤٹ کے نام سے کیا جاتا ہے۔ بارش سے متاثرہ چودہ اوورزسے کم میچ میں پانی کا وقفہ نہیں ہوگا۔ لمبے بریک کے بعد میچ شروع ہونے پر میچ ریفری کو وقفہ ختم کرنےکا اختیار ہوگا۔

پہلی مرتبہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں ڈیسیسن ریویو سسٹم استعمال ہوگا جس کی ہراننگ میں بولنگ اوربیٹنگ کرنے والی ٹیم کو امپائرکے دو فیصلوں کے خلاف اپیل کا حق ہوگا۔ کامیابی پراضافی اپیل کا موقع بھی ملے گا۔ ڈک ورتھ لوئیس رول پرعمل کے لیے گروپ میچز میں پانچ جبکہ سیمی فائنل اورفائنل میں دس اوورزکا کھیل لازمی ہوگا۔ میچ ٹائی ہونے پرسپراوور سے فیصلہ ہوگا۔ سپراوور بھی ٹائی ہونے پراس وقت تک اوورکرائے جائیں گے جب تک فیصلہ نہ ہو جائے۔ سیمی فائنل مکمل نہ ہونے پرگروپ میچ میں بہترپوزیشن حاصل کرنے والی ٹیم فائنل کھیلے گی۔ فائنل مکمل نہ ہونے پردونوں فائنلسٹ مشترکہ چیمپئن قرارپائیں گے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More