اب تک پاکستان نیوز ٹکر پاکستان ہیڈ لائن

اٹھارویں اور اکیسویں آئینی ترامیم کے خلاف درخواستوں کی سماعت

اٹھارویں اور اکیسویں آئینی ترامیم کیخلاف درخواستوں کی سماعت میں سپریم کورٹ نے کہا ہے کہ قانون وفاقی پارلیمانی نظام کیخلاف ترمیم کی اجازت نہیں دیتا ،،جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس میں کہا کہ اٹھارویں ترمیم کیخلاف عبوری فیصلے میں عدالت نے پارلیمنٹ کی بالا دستی کو تسلیم کیا۔

چیف جسٹس ناصرالملک کی سربراہی میں سترہ رکنی فل کورٹ بینچ اٹھارویں اور اکیسویں ترمیم سے متعلق کیس کی سماعت کررہا ہے،،جسٹس اعجاز افضل نے کہا کہ قانون وفاقی پارلیمانی نظام کیخلاف ترمیم کی اجازت نہیں دیتا،لیکن پارلیمنٹ کو آئین میں ترمیم کا اختیار دیتا ہے،کیا یہ دونوں شقیں متصادم نہیں؟ جس پر لاہور ہائیکورٹ بار کے وکیل حامد خان نے کہا کہ پارلیمنٹ کا آئین میں ترمیم کا اختیار لا محدود نہیں ہے، جسٹس جواد ایس خواجہ کا کہنا تھا کہ اٹھارویں ترمیم میں ہم نے معاملہ پارلیمنٹ کو بھیجا تھا کہ آپ اس کو دیکھ لیں سماعت ابھی جاری ہے۔

Related posts

عثمان بزدار، جواد رفیق ملک کے درمیان اختلافات کی خبریں بےبنیاد ہیں، فیاض الحسن چوہان

faraz ahmed

پیٹرول بحران پر قائم انکوائری کمیشن کی رپورٹ جاری

Hassam Alam

محمد حفیظ بولنگ ایکشن کی درستگی کے لئے انگلینڈ جائیں گے

Abuzar Usama

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More