اہم خبریں دنیا نیوز ٹکر

آگرہ میں انتہا پسند ہنددوں کا چرچ پر حملہ

بھارتی شہر آگرہ میں انتہا پسند ہنددوں نے چرچ پر حملہ کردیا توڑپھوڑ کی اور مقدس متبرکات کو جلادیا۔

بھارت میں ایک بار پھر مسیحی برادی ہندو انتہاپسندوں کے نشانے پر ہے، ریاست اتر پردیش کے شہر آگرہ میں ایک چرچ پر ہندو انتہا پسندوں نے حملہ کردیا، مذہبی آزادی کا نعرہ لگانے والے بھارت میں ہندو انتہا پسندوں کو کسی کی آزادی قبول نہیں ہے۔ انتہا پسندوں نے چرچ میں توڑ پھوڑ کی اور مقدس اوراق کو بھی جلایا۔ جبکہ حضرت عیسی علیہ السلام اور بی بی مریم کے مجسموں کو بھی نقصان پہنچایا، اور کھڑکی کے راستے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔

پولیس نے بھی کاغذی کارروائی کرکے اپنا فرض پور کیا لیکن اب تک کوئی گرفتاری عمل میں نہں لائی گئی۔ مسیحی برادری پر حملوں کے خلاف شدید تنقید کے باوجود مودی سرکار نے چپ سادھ رکھی ہے، گذشتہ چھ ماہ کے دوران بھارت میں عیسائیوں کی عبادت گاہوں کو نویں بار نشانہ بنایا گیا ہے۔

Related posts

اسلام آباد: اقتصادی تعاون تنظیم کاسربراہی اجلاس شروع ہوگیا

shakir shaikh

شیخ رشید کا مولانا فضل الرحمان سے مارچ اور دھرنا منسوخ کرنے کا مطالبہ

faraz ahmed

اسد درانی کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا

faraz ahmed

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More