شیری رحمان کا روپے کی گرتی قدر پر تشویش کا اظہار

اسلام آباد: نائب صدر پیپلزپارٹی و سینیٹر شیری رحمان نے روپے کی گرتی قدر پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ‏ڈالر ایک سو اٹھہتر روپے سترہ پیسے کی بلند سطح پر پہنچ گیا، اوپن مارکیٹ میں ڈالر ایک سو اکیاسی روپے بیس پیسے کا ہوگیا۔

نائب صدر پیپلزپارٹی و سینیٹر شیری رحمان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سٹے بازوں پر ذمہ داری ڈال کر خود کو بری الذمہ سمجھتی ہے، کیا ملکی معیشت اور روپے کی قدر کا فیصلہ اب سٹے باز کر رہے ہیں یا حکومت اس سازش کا حصہ ہے۔ ‏وزیراعظم کو پہلے ڈالر کی قیمت کی اطلاع ٹی وی سے ملتی تھی، اتنی غیر ذمہ دار حکومت پہلے کبھی نہیں دیکھی۔

شیری رحمان کا کہنا تھا کہ گزشتہ تین سال میں روپے کی قدر میں 30 اعشاریہ پانچ فیصد کمی ہوئی ہے، دو ہزار اٹھارہ میں ڈالر ایک سو تئیس روپے کا تھا جو اب ایک سو اٹھہتر کا ہو چکا ہے، روپے کے فری فال اور غیر یقینی کی ذمہ دار حکومت اور اس کی پالیسیاں ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More