سیلاب زدہ علاقوں میں ریلیف کا عمل جاری ہے، شرجیل میمن

وزیر اطلاعات سندھ شرجیل انعام میمن نے کہا کہ سندھ بھر میں سیلاب زدہ علاقوں میں ریلیف کا عمل جاری ہے۔ سندھ میں 6لاکھ 58ہزار 354 افراد کیمپوں میں قیام پذیر ہیں، حکومت سندھ کی جانب سے اس وقت متاثرین کو دو وقت کا کھانا فراہم کیا جا رہا ہے۔

وزیراطلاعات سندھ شرجیل انعام میمن نے پریس کانفرنس سندھ میں کہا کہ حکومت چاہتی ہے جلد لوگوں کو ریسکیو کیا جائے،سندھ میں سیلاب زدہ علاقوں میں نکاسی آب کا سلسلہ جاری ہے، ضلع کورنگی کے ایک کیمپ میں 466 متاثرین کو رہائش فراہم کی گئی ہے۔ سیلاب زدہ علاقوں میں جہاں لوگ پھنسے ہیں انہیں ریسکیو کیا جا رہا ہے۔

وزیر اطلاعات سندھ نے کہا کہ سندھ میں اب تک 559 افراد جاں بحق، 21 ہزار 891 زخمی ہوئے۔ سندھ حکومت ریسکیو اور ریلیف سے متعلق امور پر کام کررہی ہے۔ 14لاکھ سے زائد گھروں کو نقصان پہنچا ہے۔ سندھ میں سرکاری اسکولوں میں بھی متاثرین کو ٹھہرایا گیا ہے۔

وزیراطلاعات سندھ شرجیل میمن کا کہنا تھا کہ 44 لاکھ 2 ہزار 484 ایکڑ پر کھڑی فصلوں کو نقصان پہنچا۔ سیلاب سے کپاس کی فصل مکمل طور پر تباہ ہوچکی ہے۔ سیلاب سے 100 فیصد سبزیاں متاثر ہوئے ہیں۔ پاک نیوی، پاک آرمی، سندھ پولیس اور دیگر ادارے ریسکیو کے عمل میں مصروف ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More