پارلیمنٹ لاجز پر پولیس ایکشن پارلیمان پر حملہ ہے، شاہد خاقان

اسلام آباد : مسلم لیگ ن کے سینئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی نے پارلیمنٹ لاجز پر پولیس ایکشن کو جمہوریت پر حملہ قرار دیدیا ، کہتے ہیں دوہزار چودہ میں پارلیمنٹ پر اور کل پارلیمنٹ لاجز پر حملہ آور ایک ہی ہیں۔ یہ جمہوریت اور پارلیمنٹ پر حملہ ہے ، حکومت کو بھاگنے نہیں دیں گے۔ ارکان اسمبلی کو ووٹ سے روکنا آئین کی خلاف ورزی ہے۔

پارلیمنٹ لاجز کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی بھی حکومت پر خوب گرجے، بولےکل شام پولیس دروازے توڑ کر پارلیمنٹ لاجز توڑ کر اندر داخل ہوئی اور کامران مرتضیٰ اور سعدرفیق کو زدوکوب کیا، پانچ ارکان اسمبلی کو حبس بے جا میں رکھا گیا۔ پولیس نے جے یو آئی کے دو ارکان اسمبلی کو اغوا بھی کیا۔

شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ دوہزار چودہ میں حملہ کرنے والے اور کل حملہ کرنے ایک ہی ہیں یہ جمہوریت پر حملہ ہے، یہ پارلیمان پر حملہ ہے ہم اس حکومت کو بھاگنے نہیں دیں گے، ووٹ کا حق تمام ارکان کا حق ہے ، ارکان کو ووٹ سے روکنا آئین کی خلاف ورزی ہے۔

شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ اسپیکر اس واقعہ پر ابھی تک خاموش ہیں۔ اسپیکر غیر جانبدار ہوتا ہے۔ لگتا ہے انہیں پارلیمینٹرین اور پارلیمنٹ کی عزت کی کوئی پرواہ نہیں۔ اسپیکر صاحب کیا آپ نے پولیس کو پارلیمنٹ لاجز میں داخلے کی اجازت دی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More