چینی باشندوں کی سیکیورٹی سخت کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد: وزیراعظم شہباز شریف کی صدارت میں چینی شہریوں کی سیکیورٹی سے متعلق اجلاس ہوا ہے ۔اجلاس میں سی پیک منصوبوں پر کام کرنے والے چینی باشندوں کی سیکیورٹی سخت کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔وزیرِ اعظم شہباز شریف سے سائنو ویک کے وفد نے بھی ملاقات کی اور وزیرِاعظم کو ویکسینیشن مہم کے دوران سائنو ویک کی فراہمی پر بریفنگ دی ۔

وزیراعظم شہباز شریف کی صدارت میں چینی شہریوں کی سیکیورٹی سے متعلق اجلاس ہوا، جس میں وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ، احسن اقبال و دیگر نے شرکت کی۔ اجلاس میں سی پیک منصوبوں پر کام کرنے والے چینی باشندوں کی سیکیورٹی سخت کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ شہباز شریف کا کہنا تھا کہ چینی باشندوں کی سیکیورٹی پر کوئی سمجھوتا نہیں ہوگا، وزارت داخلہ اور سیکیورٹی ادارے فول پروف سیکیورٹی کو یقینی بنائیں۔

دوسری جانب ادھر وزیرِ اعظم شہباز شریف سے سائنو ویک کے وفد نے بھی ملاقات کی اور وزیرِاعظم کو ویکسینیشن مہم کے دوران سائنو ویک کی فراہمی پر بریفنگ دی۔ کمپنی نے پاکستان میں بیماریوں کی تشخیص، بچاؤ اور علاج میں سرمایہ کاری پر دلچسپی کا اظہار کیا، جس پر وزیراعظم نے چینی کمپنی کی طرف سے سرمایہ کاری کی اس پیشکش کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سرمایہ کاری کے لیے ہر قسم کا تعاون فراہم کرے گی۔

وزیراعظم نے وفاقی وزیرِ صحت کو معاملہ پر ایک ٹاسک فورس بنانے اور فوری کام کرنے کی ہدایت کی تاکہ منصوبے پر کام شروع کر سکے۔ ان کا کہنا تھا کہ ملک میں براہِ راست بیرونی سرمایہ کاری بڑھانا حکومت کی اولین ترجیح ہے، پاکستان کورونا کے دوران چینی تعاون کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More