معاونین حجاج کرام کے انتخاب کیخلاف لاہور ہائیکورٹ کا حکم معطل

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے معاونین حجاج کرام کے انتخاب کیخلاف لاہور ہائیکورٹ کا حکم معطل کردیا. عدالت نے کہا عمومی طور پر عبوری حکم نامے میں مداخلت نہیں کرتے تاہم حجاج کرام کی مشکلات کے پیش نظر ہائیکورٹ کا حکم معطل کر رہے ہیں۔

حج انتظامات کیلئے معاونین کے انتخاب کا معاملہ، چیف جسٹس عمر عطا بندیال کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے کیس کی ساعت کی۔ ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ ہائیکورٹ کے حکم سے حج انتظامات متاثر ہو رہے ہیں،معاونین کا انتخاب حجاج کرام کی خدمت کیلئے کیا جاتا ہے۔ حجاج کرام کیساتھ معاونین کا انتخاب سعودی حکومت کا تقاضا ہے۔

چیف جسٹس عمر عطا بندیال نے استفسار کیا معاونین کا انتخاب اور معاوضہ کون ادا کرتا ہے،ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے کہا معاونین کے انتخاب کیلئے سرکاری محکموں سے نام مانگے جاتے ہیں، معاونین کا معاوضہ متعلقہ محکمے دیتے ہیں۔ ہائیکورٹ کے سوالات کا جواب دینے کو تیار ہیں حکم معطل نہیں ہوا تو سعودی عرب پہنچنے والے حجاج کو مشکلات ہوگی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More