اہم خبریں تازہ ترین نیوز ٹکر پاکستان

ارکان اسمبلی کی تنخواہوں میں سواتین سو فیصد اضافے کی سفارشات منظور،سیکریٹری پارلیمانی امور

قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی پارلیامانی امور نے ارکان اسمبلی کی تنخواہوں میں سواتین سو فیصد اضافے اور والدین کیلئے اسمبلی ملازمین کی طرح طبی سہولیات کی سفارشات اتفاق رائے سے منظور کرلی ہیں۔

قائمہ کمیٹی کے اجلاس میں سیکریٹری پارلیمانی امور منظور علی خان نے بتایا ہے کہ اس وقت وفاقی سیکریٹری کی اوسط تنخواہ پچاسی ہزار جبکہ رکن اسمبلی کی تنخواہ ستائیس ہزار تین سو تہترروپے ہے جس پرکمیٹی نے رکن اسمبلی کی کم سے کم بنیادی تنخواہ پچاسی ہزار روپے کرنے کی سفارش کی ہے۔ کمیٹی ارکان کا موقف تھا کہ اسمبلی کے ملازمین کے والدین کو میڈیکل کی سہولت حاصل ہیں جبکہ یہ سہولت ارکان اسمبلی کو میسر نہیں ہیں۔ چیئر مین کمیٹی نے تمام ارکین کو یہ سہولت بھی فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایک ایم این اے کو لیفٹیننٹ جنرل ، ہائی کورٹ کے جج اور ڈی جی انٹیلی جنس بیورو کے مساوی حیثیت، پروٹوکول اور مراعات دی جائیں۔ انھوں نے کہا کہ یہ سفارشات قومی اسمبلی کے آئندہ اجلاس میں منظوری کیلئے پیش کی جائیں گیئں۔ اس کے علاوہ ارکان اسمبلی کو بزنس کلاس کے بیس ٹکٹ کے مساوی رقم فراہم کرنے کیلئے کمیٹی کی سفارش وزارت خزانہ کو بجھوادی گئی ہے۔

اجلاس میں سیکریٹری پارلیامانی امور نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ قومی اسمبلی کے سیکریٹری کی تنخواہ اسپیکر سے زیادہ ہے۔ اجلاس میں کمیٹی کے رکن ڈاکٹر نثار جٹ کا کہنا تھا کہ سر ہلانے کے علاوہ اراکین پارلیمینٹ کا قانون سازی میں کوئی کام نہیں ہے۔

Related posts

توشہ خانہ کیس: نیب ٹیم کی سابق وزیراعظم نواز شریف سے جیل میں تفتیش

Hassam Alam

جعلی شناختی کارڈ بنانے میں ملوث نادرا کا اسسٹنٹ ڈائریکٹر گرفتار

login web

نیب نے حوالات میں تشدد اور عقوبت خانوں کے الزامات مسترد کر دیے

Hunain Siddiqui

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More