یوکرین کی فوج ہتھیار ڈال دے،پیوٹن

ماسکو: روس کے صدر ولادیمیر پیوٹن نے یوکرین کی فوج سے ہتھیار ڈالنے کا مطالبہ کیا ہے ساتھ ہی انہوں نے خبردار کیا کہ باہر سے غیر ملکی مداخلت کی کوششوں کا فوری جواب دیا جائے گا۔

روسی صدر نے کہا کہ ماسکو یوکرین کو غیر عسکری کرنے کی کوشش کرے گا،ماسکو کے منصوبے میں یوکرین پر قبضہ شامل نہیں ہے۔ یہ یوکرائنی عوام کے حق خود ارادیت کے لیے ہے۔پوتن نے کہا کہ روس کیف کو جوہری ہتھیار حاصل کرنے کی اجازت نہیں دے سکتا ۔پیوٹن نے یوکرین کی فوج پر زور دیا کہ وہ “فوری طور پر ہتھیار ڈال دیں اور گھر چلے جائیں۔۔ انہوں نے وضاحت کی کہ روس کے اقدامات اپنے دفاع میں کیے گئے ۔روسی صدر کے اعلان کے بعد یوکرین کے کئی شہروں بشمول کیف اور کھارکوف میں دھماکوں کی آوازیں آنے لگیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More