پی ٹی آئی کو ممنوعہ فنڈنگ ضبطی کے نوٹس کا جواب جمع کرانے کیلئے 6 ستمبر تک کی مہلت

الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو ممنوعہ فنڈنگ ضبط کرنے کے نوٹس کا جواب جمع کرانے کے لیئے چھ ستمبر تک مہلت دے دی۔

چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجا کی سربراہی میں الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی کی ممنوعہ فنڈنگ ضبط کرنے کے کیس کی سماعت ہوئی، تحریک انصاف کے وکیل شاہ خاورالیکشن کمیشن میں پیش نہ ہوئے۔ دوران سماعت پی ٹی آئی کے معاون وکیل نے الیکشن کمیشن کے روبرو بتایا کہ انور منصور بھی سپریم کورٹ میں مصروف ہیں۔

پی ٹی آئی کے وکیل نے نوٹس پر جواب دینے کے لیئے چار ہفتوں کا وقت مانگا جس پر چیف الیکشن کمیشن نے کہا کہ سارے کاغذات تو پی ٹی آئی کیس میں جمع کرا چکی ہے۔ جس پر وکیل نے بتایا کہ بہت سے تفصیلات دینی ہیں پی ٹی آئی فارن چیپٹر سے بھی دستاویزات منگوانی ہے۔ چیف الیکشن کمشنر نے ایک ہفتے سے زائد وقت دینے سے انکار کر دیا جس پر وکیل نے دو ہفتے کا وقت دینےکے لیئے درخواست کی جس پر الیکشن کمیشن نے چھ ستمبر تک جواب طلب کر لیا۔

پی ٹی آئی نے الیکشن کمیشن کا فیصلہ اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کیا ہوا ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More