عالمی مارکیٹ میں اشیاء کی قیمتیں بڑھ رہی ہیں، وزیراعظم عمران

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت پرائس کنٹرول سے متعلق اجلاس میں فیصلہ کیاگیاہےکہ ذخیرہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوروں کے خلاف قانونی چارہ جوئی کی جائے گی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت پرائس کنٹرول سے متعلق اجلاس ہوا جس میں وفاقی وزراء حماد اظہر، فواد چوہدری، مخدوم خسرو بختیار، سید فخر امام، ڈاکٹر فروغ نسیم، مشیر خزانہ شوکت ترین، مشیر داخلہ مرزا شہزاد اکبر، معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل اور چیرمین ایف بی آر شریک تھے۔اجلاس میں شرکا کو چینی کے ذخیرے اور قیمتوں کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

اجلاس میں چینی کے مکمل ا سٹاک کو مارکیٹ میں لانے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔اجلاس میں کرشنگ قوانین پرسختی سے عمل در امد یقینی بنانےکااعادہ کرتے ہوئے 15نومبر سےملک بھر میں گنے کی کرشنگ کا آغاز کرنےکا کا فیصلہ کیا گیا ۔ اجلاس کے شرکاء نے فیصلہ کیا کہ ذخیرہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوروں کے خلاف قانونی چارہ جوئی کی جائے گی۔

اس مو قع پر اپنے خطاب میں وزیر اعظم نے کہا کہ بین الاقوامی مارکیٹ میں اشیاء کی قیمتیں بڑھ رہی ہیں چونکہ پاکستان درآمدی اشیاء پر انحصار کرتا ہے اس لیے مقامی مارکیٹ پر اس کے اثرات مرتب ہو رہے ہیں تاہم حکومت غریب طبقے پر بوجھ کم کرنے کے لیے ہر ممکن اقدامات لے رہی ہے۔ احساس راشن، کامیاب پاکستان، کسان کارڈ، صحت کارڈ اور احساس پروگرام کی دیگر اسکیمیں غریب طبقے کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے جاری کی گئی ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ حکومت سیاست سے بالاتر ہو کر عوام کی خدمت پر توجہ مرکوز کئے ہوئے ہے اور مہنگائی کے اثرات کا احساس رکھتی ہے۔ عوام کے سامنے حقائق اور اعداد و شمار پیش کیے جائیں اور موثر آگاہی مہم چلائی جائے۔ منافع خوری اور ذخیرہ اندوزی کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی، قانون کے مطابق ذخیرہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوری کے مرتکب افراد کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More