صدر نے الیکٹرانک کرائم بل 2016میں ترمیم کیلئے آرڈیننس پر دستخط کر دئیے

اسلام آباد: صدر مملکت نے الیکٹرانک کرائم بل 2016میں ترمیم کیلئے آرڈیننس پر دستخط کر دئیے۔آرڈیننس میں کسی کی پرائیویسی یا ساکھ کو نقصان پہنچانا ناقابل ضمانت جرم قرار دیا گیا ہے ۔

صدر مملکت نےالیکٹرانک کرائم بل 2016 میں ترمیم کیلئے آرڈیننس پردستخط کردئیے۔آرڈیننس کے تحت کسی کی پرائیویسی یا ساکھ کو نقصان پہنچانا ناقابل ضمانت جرم قرار دیا گیا ہے ۔ نئے قانون میں3سال سے سزا بڑھا کر5سال کردی گئی۔متاثرہ شخص یا ادارے کے نمائندے کو بھی شکایت درج کرانے کا اختیارہوگا ۔

آرڈیننس کے تحت ٹرائل کورٹ کو 6ماہ میں ٹرائل مکمل کرنے کا پابند بنا دیا گیا۔ٹرائل کورٹ کو ماہانہ کارکردگی رپورٹ متعلقہ ہائیکورٹ کو بھجواناہوگی۔بروقت کیس نہ نمٹایاگیاتو حکومت ہائیکورٹ کو کاروائی کی سفارش کر سکےگی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More