تازہ ترین
نواز شریف صحتیاب ہو کر عدالتوں اور مقدمات کا سامنا کریں گے، خواجہ آصف

نواز شریف صحتیاب ہو کر عدالتوں اور مقدمات کا سامنا کریں گے، خواجہ آصف

اسلام آباد: (15 ستمبر 2020) مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں نے کہا ہے کہ نواز شریف سے متعلق عدالتی فیصلے کا احترام ہے، لیکن نوازشریف کی صحت اس بات کی اجازت نہیں دیتی کہ وہ پاکستان آسکیں۔ وہ علاج کے بعد وطن واپس آ کر عدالتوں کا سامنا  ضرور کریں گے۔

مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں شاہد خاقان عباسی اور احسن اقبال کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے خواجہ آصف نے کہا کہ نواز شریف نے  ہمیشہ عدالتوں کا احترام کیا ہے۔ نواز شریف بیمار اہلیہ کو چھوڑ کر پاکستان آئے تھے، ان کو گرفتاری کا بھی علم تھا۔ نواز شریف تین مرتبہ وزیر اعظم رہے لیکن عدالتوں کا ہمیشہ احترام کیا۔ عدالتوں نے ان کو علاج کیلئے باہر جانے کی اجازت دی۔ وہ بیرون ملک زیرعلاج رہے ہیں، ہم پھر بھی عدالتوں کا احترام کرتے ہیں۔ ہم سر تسلیم خم کرتے ہیں لیکن نواز شریف کی صحت اس قابل نہیں۔ ان کے پلیٹ لیٹس کم ہورہے ہیں۔ جب بھی ان کی صحت ٹھیک ہوئی، وطن واپس آ کر عدالتوں اور مقدمات کا سامنا کریں گے۔

اس موقع پر شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ نواز شریف کی صحت کی رپورٹس واضح ہیں۔ ہم پاکستان کے عوام کے سامنے رکھتے ہیں۔ نواز شریف پہلے بھی لندن سے آئے اور جیل گئے۔ علاج کرانا ان کا قانونی حق ہے۔ وہ علاج کرانے کے بعد واپس آئیں گے اور عدالتوں کا سامنا کریں گے۔

جبکہ مسلم لیگ (ن) کے سیکریٹری جنرل احسن اقبال نے کہا کہ عدالت نے فیصلہ کیا اور ان کو علاج پر جانے کی اجازت دی تھی۔ نواز شریف کو ہم نے نہیں بلکہ عدالت نے اور حکومت نے بیرون ملک بھجوایا۔ وزیراعظم عمران خان نے خود فیصلہ کیا۔ صوبائی وزیر ہیلتھ اور انکے وزراء نے اس وقت تصدیق کی کہ نواز شریف واقعی بیمار ہیں، لیکن آج کہہ رہے ہیں کہ نواز شریف واپس آئیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ عمران نیازی سیاست نواز شریف کی صحت پر مت کرو۔ سیاست کرو، اپنی کارکردگی پر کرو۔ عوام کو جواب دو کہ عوام کیلئے آپ نے کیا کیا؟

Comments are closed.

Scroll To Top