پیٹرول 24 اور ڈیزل 59 روپے مہنگا

اسلام آباد: حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھانے کا اعلان کردیا، پٹرول 24 اور ڈیزل 59 روپے مہنگا ہوگیا۔ نئی قیمتوں کی اطلاق آج رات بارہ بجے سےہوگا۔

حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں 24 روپے 3 پیسے کا اضافہ کردیا۔فی لیٹر پیٹرول کی قیمت 233 روپے 89پیسے کا ہوگئی،ڈیزل کی قیمت میں 59 روپے فی لیٹر کا اضافہ کردیا گیا۔ ڈیزل کی نئی قیمت 264 روپے ہوگئی۔ لائٹ ڈیزل آئل 39.16 روپے اور مٹی کا تیل 39.49 روپے فی لیٹر مہنگا ہونے کا اعلان۔

وزیر مملکت پٹرولیم مصدق ملک کی ہمراہ نیوز کانفرنس کرتے ہوئے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے کہا کہ عالمی مارکیٹ میں پٹرول کی قیمت 120 ڈالر ہے ،ابھی پٹرول میں 24 روپے فی لیٹر کا خسارہ ہے ۔

انہوں نے کہا کہ مئی میں پٹرولیم مصنوعات پر 120 ارب روپے کی سبسڈی دی گئی ، سستا تیل بیچنے کے باعث ملک میں اپریل میں پٹرول کی طلب 20 فیصد بڑھ گئی۔

مفتاح اسماعیل نے کہا کہ گزشتہ 30 سالوں میں ملک میں اتنا بڑا بیگاڑ دیکھا ،عمران خان نے مسلم لیگ ن کیلئے بارودی سرنگ بچھائے ،عمران خان نے جان بوجھ کر پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کی ،عمران خان آئی ایم ایف سے سخت شرائط پر معاہدہ کر کے مکر گئے۔

ان کا کہنا تھا کہ مڈل کلاس سخت مہنگائی برداشت کر رہی ہے ، چند ماہ کیلئے مشکل ہو گی،غریب لوگوں کو اضافی ٹیکس سے بچایا ہے ،غریب لوگوں کو مالی امداد دیں گے، ہم حالات پر قابو پا لیں گے ۔

وزیر مملکت مصدق ملک کا کہنا تھا کہ مشکل فیصلہ نہ کیا گئے تو حالات بے قابو ہوجائیں گے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More