پشاور بلدیاتی انتخابات، پولنگ سے قبل ہی دھاندلی کے الزامات سامنے آگئے

پشاور: پشاورمیں بلدیاتی انتخابات کےلئے پولنگ سے قبل ہی دھاندلی کے الزامات سامنے آگئے۔

پشاور میں میئرکے بیلٹ پیپر پر رات سے ہی ٹھپے لگنے کی ویڈیوسامنے آگئی ۔این سی تینتیس میں خاتون پریزا ئیڈنگ آفیسر پر پیپلزپارٹی کے کارکنوں نے الزام عائدکیا کہ خاتون آفیسرتحریک انصاف کے امیدوار کے لئے بیلٹ پر ٹھپے لگا رہی تھیں، پولنگ سٹیشن میں ٹھپے لگنے کی اطلاعات پر مختلف سیاسی پارٹیوں کے کارکن موقع پرپہنچ گئے۔

پولنگ سے پہلے بیلٹ پیپرپہنچنے پر مظاہرین پولنگ سٹیشن میں داخل ہو گئے اور دھاندلی کے نعرے شروع کردیئے ۔ مظاہرین نے الزام عائد کیا ہے کہ اسکول میں پہلے سے بیلٹ پیپر پر اسٹیمپ لگائی جا رہی ہیں۔

دوسری جانب پشاور الیکشن کمیشن نے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے پولنگ عملے کو تبدیل کردیا ہے ،اور کہا ہے کہ تمام پولنگ مٹیریل اور بیلٹ پیپرز محفوظ ہے ،ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جا رہی ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More