عوام تبدیلی کے دعویداروں سے نفرت کرتی ہے، ایمل ولی خان

پشاور: عوامی نیشنل پارٹی خیبر پختونخوا کے صدر ایمل ولی خان نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت جماعتی بنیادوں پر بلدیاتی انتخابات کروانے سے بھاگ رہی ہے۔پاکستان کو بحرانوں میں دھکیلنے والے بلے اور تبدیلی کے دعویداروں سے عوام نفرت کرتی ہے۔ پی ٹی آئی اپنی ناکامی کے ڈر سے غیر جماعتی بنیادوں پر بلدیاتی انتخابات کروانے کیلئے ایڑی چوٹی کا زور لگا رہی ہے۔

پشاور میں باچا خان مرکز پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے عوامی نیشنل پارٹی خیبر پختونخوا کے صدر ایمل ولی خان کاکہنا تھا کہ اے این پی جماعتی بنیادوں پر انتخابات کے عدالتی فیصلے کے ساتھ کھڑی ہے۔ اس طرح کے فیصلے جمہوریت کو مضبوط کرنے کے مترادف ہیں۔اگر سپریم کورٹ میں پشاور ہائی کورٹ کافیصلہ تبدیل ہوجاتا ہے تو اے این پی اسکے خلاف عوام میں جائے گی۔

انکاکہنا تھا کہ جو بلدیاتی نظام موجودہ حکومت پیش کررہی ہے وہ عوام کے ساتھ مذاق ہے۔ پی ٹی آئی کی حکومت آرٹیکل 140 کی خلاف ورزی کی مرتکب ہورہی ہے۔عوام کو وسائل اور اختیارات سے محروم کرنا چاہتی ہے۔یہ تاریخ کی پہلی ضلعی حکومت ہوگی جس میں ضلع ہی نہیں ہوگا۔جب ضلعی حکومت ہی نہیں ہوگی تو عوام کو انکے وسائل اور فیصلوں کا اختیار کیسے ملے گا۔

ایمل ولی نے کہا کہ اگر ضلعی حکومتوں کو ختم کرنے کا مقصد اختیارات کی جنگ کو ختم کرنا ہے تو پھر صوبے میں وزیراعلیٰ کو بھی ختم کردیں اور سارے اختیارات چیف سیکرٹری کو منتقل کردیں۔تحریک انصاف کی حکومت جمہوریت کو کمزورکرنے پر تلی ہوئی ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More