متحدہ اپوزیشن کا وزیراعظم سے استعفے کا مطالبہ

اسلام آباد: حکومت مخالف اتحاد پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ ساڑھے تین سال پہلے جس ڈرامے کا آغاز ہوا تھا اس کا انجام ہو گیا ہے۔

اپوزیشن جماعتوں کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران امیر جمعیت علمائے اسلام (ف) مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کو آج استعفیٰ دے دینا چاہیے۔ ساڑھے تین سال پہلے جس ڈرامے کا آغاز ہوا تھا اس کا انجام ہو گیا ہے۔ اب تمہارے لیے چاٹنے کیلئے پانی کی ایک بوند بھی نہیں رہی، اب سب کچھ ہاتھ سے نکل چکا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ملک کو دوبارہ کھڑا کرنے کیلئے یکجہتی کی ضرورت ہو گی۔ یقیناًہمارے سامنے چیلنجز ہیں۔ جن دوستوں نے ابھی تک فیصلہ نہیں کیا وقت ہے قومی دھارے میں شامل ہوں۔ تمسخر کی سیاست نے معاشرے کی بنیادوں کو ہلا کر رکھ دیا ہے۔ پاکستان میں صحتمند سیاست کی بنیاد ڈالنا چاہتے ہیں، جھوٹی سیاست کا آج خاتمہ ہورہا ہے، 4 سال پہلے شروع ہونے والے ڈرامے کا ڈراپ سین ہوگیا، اس کے اثرات قوم تک پہنچیں گے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ ایم کیو ایم کا فیصلہ پاکستان کیلئے سیاسی یکجہتی کا اظہارہے۔ ایم کیوایم کے فیصلے کا خیرمقدم کرتا ہوں۔ ایم کیو ایم عدم اعتماد میں اپوزیشن کا ساتھ دےگی۔ متحدہ اپوزیشن کی تعداد 175 ہو گئی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ عالمی سازش تب ہوئی تھی جب عمران خان کو اقتدار میں لایا گیا تھا اب کوئی عالمی سازش نہیں ہے ۔ ڈرامے مت بناؤ، آپ کی اپنی حیثیت نہیں ہے کوئی آپ کو کوئی خط بھیجے۔ہم نے عالمی ایجنڈے کو ناکام بنانا ہے۔ ہم ایک خود مختار ریاست کا تصور رکھتے ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More