اب تک پاکستان تازہ ترین نیوز ٹکر پاکستان ہیڈ لائن

امریکی نائب صدراور پینٹاگون کے بیانات پرتشویش ہے،تہمینہ جنجوعہ

اسلام آباد:(22 دسمبر 2017) پاکستان نے امریکی نائب صدرمائیک پینس او پینٹاگون کےبیانات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ فلسطین کے مسئلہ پر جنرل اسمبلی میں پاکستان نے واضح موقف اختیار کیا۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

تفصیلات کے مطابق سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خارجہ امور کا اجلاس ہوا جس میں سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے شرکت کی، اس موقع پر جنرل اسمبلی میں فلسطین کے معاملے پرپاکستان کے واضح موقف اپنانے پر کمیٹی نے وزارت خارجہ کو خراج تحسین پیش کیا جب کہ اس موقع پر سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے بتایا کہ امریکی سیکیورٹی پالیسی پر پاکستان نے واضح اور مفصل جواب دیا ہے اور پاکستان نے امریکی ہرزہ سرائی کو یکسر مسترد کر دیا ہے۔تہمینہ جنجوعہ نے کہا کہ ہم یکطرفہ کارروائی کے بیان پر امریکا کے ساتھ بات چیت میں مصروف ہیں، امریکا کو ہمارے خدشات پر بھی توجہ دینا چاہیے جب کہ پاکستان اور بھارت کے ساتھ ایک جیسا برتاوٴ کرنا چاہیے۔

سیکرٹری خارجہ کا کہنا تھا کہ امریکی نائب صدر پینس اور پینٹاگون کے بیانات پر تشویش ہے جبکہ پاکستان نے دہشت گردوں کے محفوظ ٹھکانے ختم کردیئے، اس موقع پر سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا کہ کہیں ایسا نہ ہو کہ اسامہ بن لادن کی طرح پھر کوئی آپریشن ہو جائیں، سینیٹر مشاہد حسین سید کا کہنا تھا کہ امریکی صدر اور دیگرحکام نے واضح دھمکی دی ہے۔فرحت اللہ بابر نے کہا کہ وزارت خارجہ نے حوثیوں کے سعودی عرب میں میزائل حملے پر یکطرفہ پوزیشن لی، جس پر دفتر خارجہ حکام کا کہنا تھا کہ امریکیوں کے مطابق حوثیوں کے میزائل ایرانی ساختہ ہیں، سعودی عرب کے حوالے سے میزائل حملہ پر سوچ سمجھ کر بیان جاری کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیے

مسئلہ کشمیر کا التواء اقوام متحدہ کی ناکامی ہے، ملیحہ لودھی

اقوام متحدہ میں ملیحہ لودھی سےامریکی وارکالج کے فیکلٹی ممبران کی ملاقات

 

Related posts

کراچی: وزیر داخلہ سندھ کا اب تک کی خبر کا نوٹس، ایس ایچ او معطل

Developer

فیسوں میں اضافے کے خلاف جامعہ پشاور میں طلبا کا احتجاج جاری

shakir shaikh

وزیراعظم عمران خان کل ایک روزہ دورے پر قطر جائیں گے

faraz ahmed

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More