تازہ ترین
شریف گروپ آف کمپنیز کا اہم عہدے دار ریمانڈ پر نیب کے حوالے

شریف گروپ آف کمپنیز کا اہم عہدے دار ریمانڈ پر نیب کے حوالے

لاہور:(03 اگست 2020) احتساب عدالت نے شریف گروپ آف کمپنیز کے سی او ایف محمد عثمان کو چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں شریف گروپ آف کمپنیزکےسی ایف او محمد عثمان کےجسمانی ریمانڈ کی درخواست پر سماعت ہوئی، سی ایف او محمد عثمان کو عدالت میں پیش کیا۔

نیب پراسیکیوٹر وراث علی جنجوعہ نے احتساب عدالت میں دلائل دیتے ہوئے کہا محمد عثمان کے خلاف نیب میں گرفتارملزمان کےبیانات کی روشنی میں گرفتارکیا گیا، محمد عثمان کی گرفتاری قانون کے مطابق ہے، ان کی گرفتاری ٹھوس شواہد کی روشنی میں عمل میں لائی گئی۔

نیب پراسکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ محمد عثمان شریف فیملیزکےخلاف منی لانڈرنگ کیلئےکام کرتارہا ہے، عدالت ملزم سے تفتیش کے لیے چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کرنے کا حکم دے۔

عدالت نے دلائل سننے کے بعد بعد ملزم محمد عثمان کو 14روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا اور سماعت 17 اگست تک ملتوی کردی۔

اس سے قبل سی ایف او محمد عثمان کے وکیل علی رضا ایڈووکیٹ نے جسمانی ریمانڈ کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ محمد عثمان کو سیاسی بنیادوں پر گرفتار کیا گیا، 28جولائی کو چیئرمین نیب نے منی لانڈرنگ کیس پرخود پریس ریلیز جاری کرائی، پریس ریلیز میں بتایا گیا منی لانڈرنگ کا ریفرنس تیار ہے جلد دائر ہوگا، نیب کی جانب سے محمدعثمان کی گرفتاری سمجھ سے باہر ہے۔

Comments are closed.

Scroll To Top