این اے 133 انتخابات، سیاسی جماعتوں کی جانب سے ووٹ خریدنے کی ویڈیوز سامنے آنے لگی

لاہور: این اے 133 کےضمنی انتخاب میں نوٹوں کی چمک دھمک عروج پر پہنچ گئی ۔ سیاسی پارٹیوں کی جانب سے ووٹ خریدنے کی مبینہ ویڈیو سامنے آنے لگی۔

مبینہ ویڈیو میں ووٹرز کو حلف دے کر پیسے وصول کرتے دیکھا جاسکتاہے ۔۔ ن لیگ کی جانب سے ووٹرز سے آواز بلند حلف لے کر پیسے دیئے جارہے ہیں ۔ تمام افراد سے شیر پر مہر لگانے کا حلف لیا جاتاہے۔

تحریک انصاف نے ن لیگ کی ووٹ خریدنے کی مبینہ ویڈیوز پر الیکشن کمیشن سے نوٹس کا مطالبہ کردیا ہے۔ مسرت جمشید چیمہ کا کہناہے کہ ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پربیس ہزارجرمانہ کر کےآنکھوں میں دھول نہ جھونکے۔ ن لیگ کا ووٹ کوعزت دو کا نعرہ دراصل نوٹ کوعزت دوہے ۔

جبکہ دوسری جانب پیپلزپارٹی کو الیکشن کے میدان سے آؤٹ کرنے کیلئے مسلم لیگ ن نے الیکشن کمیشن سے رجوع کرلیا ۔ تحریری شکایت میں موقف اپنایا کہ پیپلزپارٹی دو ہزار فی کس کے عوض ووٹ خرید رہی ہے ۔ الیکشن کمیشن معاملے کی تحقیقات کرکے پی پی پی کے امیدوار اسلم گل کو نااہل قراردے۔ ن لیگ نے مبینہ ویڈیوز کو بھی تحریری درخواست کے ساتھ بطور ثبوت منسلک کیاہے ۔

واضح رہے حلقہ این اے ایک سو تنتیس میں ضمنی انتخابات پانچ دسمبر کو ہوں گے۔ مسلم لیگ ن کے پرویز ملک کی وفات پر یہ سیٹ خالی ہوئی تھی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More