عمران خان نے کبھی مفاہمت کا نہیں سوچا، مراد علی شاہ

اسلام آباد: وزیراعظم کے خلاف تحریک عدم اعتماد میں اپوزیشن کو پاس ایک سو بہتر ارکان سے زائد کی حمایت حاصل ہے ، وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا بڑا دعویٰ ۔ حکومت کو فوری طور پر اسمبلی اجلاس بلا کر ووٹنگ کرانے کا چیلنج بھی دیدیا۔ بولے عمران خان نے کبھی مفاہمت کا نہیں سوچا، ہم نے انتخابی اصلاحات میں حکومت کے ساتھ بیٹھنے کی آمادگی ظاہر کی تھی ۔

اسلام آباد کی احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی حکومت پر شدید تنقید ، عدم اعتماد میں نمبر گیم پورے ہونے کے دعوے سمیت اجلاس بلا کر ووٹنگ کرانے کا کھلا چیلنج بھی دیدیا۔

وزیر اعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ ساڑھے تین سال سے عوام پر ظلم و ستم کے پہاڑ توڑے گئے ۔ پیپلز پارٹی کے لانگ مارچ سے حکومت پر دباؤ پڑا۔ انہوں نے اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الٰہی کے بیانات کو حکومت کے خلاف چارج شیٹ قرار دے دیا۔

وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کہتے ہیں؛ عمران خان نے کبھی مفاہمت کا نہیں سوچا، ہم نے انتخابی اصلاحات میں حکومت کے ساتھ بیٹھنے کی آمادگی ظاہر کی تھی ۔بولے عدم اعتماد کی تحریک کے پیچھے پاکستان کی عوام ہے، جب کھیل میں ہارنے کا یقین ہو تو گھبراہٹ ظاہر ہوجاتی ہے۔مراد علی شاہ کے مطابق ایم کیو ایم کے مطالبات جائز ہیں بس انکے الفاظ دیکھنا ہوں گے۔ جمعیتِ علمائے اسلام کے لانگ مارچ میں شرکت کا فیصلہ پیپلز پارٹی کی قیادت کریگی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More