ایف آئی اے نے سینئر صحافی محسن بیگ کو گرفتار کرلیا

حکومت پر تنقید کرنے پر ایف آئی اے سائبر کرائم نے اسلام آباد میں صحافی محسن بیگ کو گرفتار کرلیا،گرفتاری کے دوران مزاحمت پر تھانہ مارگلہ نے بھی محسن بیگ کے خلاف مقدمہ درج کیا جس میں دہشت گردی،پولیس مزاحمت،دھاوا بولنے اور محبوس کرنے کی دفعات شامل کی گئی ہیں۔

ایف آئی اے کی ٹیم نے صحافی محسن بیگ کی گرفتاری کے لئے اسلام آباد میں ان کی رہائش گاہ پر گئی، گرفتاری کے دوران ایف آئی اے کی ٹیم کے ساتھ مزاحمت ہوئی، فائرنگ سے ایف آئی اے کا ایک اہلکار زخمی ہوگیا ، ایف آئی اے نے صحافی محسن بیگ کو تھانہ منتقل کر دیا گیا، محسن بیگ کے خلاف تھانہ مارگلہ میں نئی ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ ایف آئی آر سرکار کی مدعیت میں درج کی گئی۔

صحافی محسن بیگ پر انسداد دہشت گردی کی دفعات لگائی گئی ہیں ، محسن بیگ پر اے ٹی اے تین سو بیالیس سمیت دیگر دفعات لگائی ہیں،محسن بیگ کے وکیل راحیل نیازی نے غیر قانونی حراست کے خلاف درخواست دائر کر دی ہے۔ درخواست پر سماعت ایڈیشنل سیشن جج ظفر اقبال نے کی ۔عدالت نے بیلف مقرر کر کے محسن بیگ کو عدالت پیش کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

صحافی محسن بیگ کے خلاف ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ لاہور میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ مقدمہ وفاقی وزیر مراد سعید کی مدعیت میں درج کیا گیا،،ایف آئی آر کے مطابق محسن بیگ نے نجی ٹی وی پروگرام میں مراد سعید کے خلاف غیر اخلاقی زبان استعمال کی، ٹی وی پروگرام میں بے بنیاد کہانی اور توہین آمیز ریمارکس دیئے گئے

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More