وزیرخارجہ سے یورپی یونین کے نمائندے برائے انسانی حقوق کی ملاقات

اسلام آباد:وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ یورپی یونین کا شمار پاکستان کے سب سے بڑے تجارتی اور سرمایہ کاری شراکت داروں میں ہوتا ہے ۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے یورپی یونین کے خصوصی نمائندے برائے انسانی حقوق ایمون گلمورنے ملاقات کی۔اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان، یورپی یونین کے ساتھ اسٹریٹیجک انگیجمنٹ پلان میں شامل ماحولیاتی تبدیلی، سیکورٹی سمیت باہمی دلچسپی کے اہم شعبوں میں تعاون کے فروغ کیلئے پر عزم ہے۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ پاکستان، جی ایس پی پلس سے متعلقہ 27 کنونشنز کو مکمل طور پر نافذ کرنے کے لیے پر عزم ہے۔یورپی یونین کا شمار پاکستان کے سب سے بڑے تجارتی اور سرمایہ کاری شراکت داروں میں ہوتا ہے۔روزگار کے مواقع پیدا کرنے، خواتین کو بااختیار بنانے سمیت ہماری حکومت کا سماجی و اقتصادی ایجنڈا، جی ایس پی پلس اسکیم کے ساتھ مماثلت رکھتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان یورپی کمیشن کے مانیٹرنگ مشن کے دورہ پاکستان کا منتظر ہے، جو مارچ 2022 میں متوقع ہے۔امید ہے کہ پاکستان کی طرف سے قانون سازی اور انتظامی شعبوں میں اٹھائے گئے اقدامات، باہمی طور پر فائدہ مند ثابت ہوں گے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان، انسانی حقوق اور بنیادی آزادیوں کے تحفظ کے لیے پر عزم ہے۔بھارت کی طرف سے مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا تسلسل تشویشناک ہے۔بھارت، عالمی قوانین کو پس پشت ڈالتے ہوئے مقبوضہ جموں و کشمیر میں آبادی کے تناسب کو تبدیل کرنے کے درپے ہے۔یورپی یونین کو ان سنگین خلاف ورزیوں کا نوٹس لینے کی ضرورت ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More