سابق حکومت نے ملکی معیشت تباہ کی، مریم اورنگزیب

اسلام آباد: وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ سابق حکومت چار سال تک اپنی نالائقی، نااہلی اور چوری کے ذریعے ڈاکے ڈالتی رہی، ملکی معیشت تباہ کی، عوام کا روزگار تباہ کیا۔

اسلام آباد میں پریس پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب نے سابق وزیراعظم عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے کہا پچھلی حکومت عوام کو کسی قسم کا کوئی ریلیف نہیں دے سکی، عمران خان کی حکومت ایک کروڑ نوکری اور پچاس لاکھ گھر کا خواب عوام کو دے کر بھاگ گئی، انہوں نے نوے دن میں کرپشن کے خاتمہ کا خواب دیا لیکن خود تاریخی ڈاکے ڈالے۔کوئی شعبہ ایسا نہیں جس میں چوری، ڈاکوں، ہیروں اور جواہرات کی خریداری کی داستانیں نہ ہوں۔

وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا سابق دور میں افسران کی ٹرانسفریں اور تقرریاں بھی دام لگا کر کی جاتی تھیں، عمران خان چار سال تک ملک پر مسلط رہے، یہ وہی وزیراعظم تھا جو کہتا تھا کہ ڈالر کے نرخ اسے ٹی وی سے پتہ چلتے ہیں آج وہی شخص مہنگائی پر لیکچر دے رہا ہے جو خود مہنگائی کا ذمہ دار ہے۔

مریم اورنگزیب کے مطابق عمران خان نے ماسٹر مائنڈ بشریٰ بی بی کی ہدایت پر بیرونی سازش کی بیانیہ گھڑا، عمران خان کا رویہ یہ ہے کہ کوئی ان پر الزامات لگائے یا کرپشن ثابت کرے تو وہ اسے غدداری کے ساتھ جوڑتے ہیں۔

مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ پنجاب میں 100 یونٹ تک بجلی استعمال کرنے والوں کو بجلی کی قیمت سے استثنیٰ حاصل ہوگااس مد میں 100 بلین کا مجموعی بجٹ رکھا گیا ہے، 43 لاکھ لوگ گرمیوں میں اور 87 لاکھ افراد سردیوں میں اس سے مستفید ہوں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ سو یونٹ تک بجلی استعمال کرنے والوں کے لئے پنجاب حکومت نے بجٹ میں روشن گھرانہ سکیم کے تحت یہ سکیم متعارف کروائی بجٹ دستاویز اس بات کی گواہ ہے کہ پنجاب حکومت نے 2022ء کے بجٹ میں یہ سکیم شامل کی اور اس کے لئے بجٹ مختص کیا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More