کراچی: شارخ قتل کیس میں ملوث پولیس اہلکار کی مبینہ خودکشی

کراچی: شارخ قتل کیس میں ملوث پولیس اہلکار کی مبینہ خودکشی کا واقعہ،ملزم حاظر ڈیوٹی پولیس اہلکار نکلا۔ پولیس اہکار فرزند علی ایس ایس پی ویسٹ انوسٹیگیشن کے دفتر میں تعینات تھا،ملزم دن میں ورادتیں اور رات کو ڈیوٹی کرتا تھا۔

پولیس اہکار فرزند علی ایس ایس پی ویسٹ انوسٹیگیشن کے دفتر میں تعینات تھا، ملزم فرزند آفس کے گیٹ پر نائٹ سنتری کی ڈیوٹی دے رہا تھا، ملزم دن میں ورادتیں اور رات کو ڈیوٹی کرتا تھا، پولیس اہکار دو تین بار معطل ہوکر پھر بحال ہوگیا تھا، واردت کے روز ملزم کے ساتھ ایک عمران نامی لڑکا بھی موجود تھا، ملزم نے رکشے میں خواتین دیکھ کر ان کا پیچھا کیا اور پیٹرول پمپ پر ساتھی کو اتار دیا ۔

ملزم کاُ ساتھی پیٹرول پمپ سے ہوٹل پر بیٹھ کر انتظار کررہا تھا اور فرزند نے ورادت کی، ملزم نے واردت والی رات بھی ڈیوٹی انجام دی تھی۔ شارخ کو جس پسٹل سے مارا اس کا خول نبی بخش میں ایک ڈکیتی کی ورادت شہری کو زخمی کرنے سے میچ ہوا تھا، ملزم پر ڈکیتی منشیات اور اسلحے کے مقدمات درج تھے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More