کراچی میں جرائم کی وارداتیں،993 شہری موبائل فونز سے محروم

نئے سال کے آغاز پر بھی کراچی میں جرائم کی وارداتیں تھم نا سکی، سال کے اولین پندرہ دنوں کے دوران بھی شہری جرائم پیشہ عناصر کے رحم و کرم پر رہے، اسٹریٹ کرائم کی درجنوں وارداتوں میں متعدد افراد ہلاک و زخمی بھی ہوئے۔

اسٹریٹ کرائم کے خاتمے کے حکام کے دعوے محض دعوے ہی رہے ۔ نئے سال کے آغاز پر بھی کراچی جرائم پیشہ افراد کے نشانے پر رہا، سال کے پہلے پندرہ دنوں کے دوران شہر میں پانچ گاڑیاں اور 206 موٹر سائیکلیں بزور اسلحہ چھین لی گئیں جبکہ 73 گاڑیاں اور 1312 موٹر سائیکلیں چوری بھی ہوئیں۔ یکم سے پندرہ جنوری کے دوران 993 شہری موبائل فونز سے محروم کردیے گئے ۔

گاڑیاں اور موبائل فونز چھیننے کی وارداتوں کے دوران متعدد شہری درندہ صفت لٹیروں کے ہاتھوں جان سے ہاتھ دھو بیٹھے جبکہ کئی زخمی بھی ہوئے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More