عمران خان کا فوجی قیادت کے بارے میں توہین آمیز بیان، پاک فوج کا شدید غم و غصہ

پاک فوج کا چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کے بیان پر ردعمل۔ کہتے ہیں پاک فوج کی اعلیٰ قیادت کو بدنام کرنے کی کوشش کی گئی ہے، نازک وقت میں پاک فوج کی سینیئر قیادت کو متنازع بنانے کی کوشش کی گئی۔ آرمی چیف کی تعیناتی کے طریقہ کار کو متنازعہ بنانا ملک کے مفاد میں نہیں۔

پاکستان آرمی فیصل آباد میں ایک سیاسی جلسے کے دوران چیئرمین پی ٹی آئی کی جانب سے پاک فوج کی سینیئر قیادت کے بارے میں توہین آمیز اور غیر ضروری بیان پر برہم ہے۔ افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ پاک فوج کی اعلیٰ قیادت کو ایک ایسے وقت میں بدنام اور کمزور کرنے کی کوشش کی گئی ہے جب یہ ادارہ آئے روز پاکستانی عوام کی سلامتی اور تحفظ کے لیے جانیں دے رہا ہے۔

سینیئر سیاستدان پاکستان آرمی کے سی او اے ایس کی تقرری کو متنازعہ بنا رہے ہیں جبکہ آئین میں اس کے طریقہ کار اچھی طرح سے بیان کیا گیا ہے۔ یہ انتہائی افسوس ناک اور مایوس کن ہے۔

فوج کی اعلیٰ قیادت نے اپنی حب الوطنی اور پیشہ ورانہ صلاحیتوں کو کسی شک و شبہ سے بالاتر ثابت کرنے کے لیے دہائیوں پر محیط شاندار خدمات انجام دیں۔ پاک فوج کی سینیئر قیادت پر سیاست کرنا اور سی او اے ایس کے انتخاب کے عمل کو اسکینڈلائز کرنا نہ تو ریاست پاکستان کے مفاد میں ہے اور نہ ہی ادارے کے۔ پاک فوج اسلامی جمہوریہ پاکستان کے آئین کی پاسداری کے لیے اپنے عزم کا اعادہ کرتی ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More