ملک میں مہنگائی کی شرح ساڑھے 19 فیصد تک پہنچ گئی

اسلام آباد: ادارہ شماریات کے اعداد وشمار کے مطابق ہفتہ وار مہنگائی میں 0.55 فیصد اضافہ ہوا جس کے بعد سالانہ بنیاد پر مہنگائی ساڑھے 19 فیصد تک پہنچ گئی ۔رپورٹ کے مطابق بجلی کی فی یونٹ قیمت میں 7 پیسے کا اضافہ ہوا۔

وفاقی ادارہ شماریات کی جانب سے ہفتہ وار مہنگائی کے جاری اعدادوشمارکے مطابق ماہانہ 18 ہزار سے کم کمانے والوں کیلئے مہنگائی 21 فیصد سے تجاوز کرگئی ہے۔ گزشتہ ہفتے 17 اشیائے ضروریہ مہنگی، 15 کی قیمتوں میں کمی جبکہ تازہ دودھ ، دہی ، کوکنگ آئل سمیت 19 اشیاء کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

رپورٹ کے مطابق دالیں، بجلی، کیلے، لکڑی، گھی، لہسن، نمک، صابن کے نرخوں میں اضافہ ہوا جبکہ چکن، ٹماٹر، آلو، پیاز، انڈے، چینی، گڑ، مرچ، پیٹرول، ڈیزل سستا ہوا۔ ایک ہفتے کے دوران دال مسور کی فی کلو قیمت میں 7روپے 98 پیسے کا اضافہ ہوا، دال مسور کی فی کلو قیمت 194 سے بڑھ کر 202روپے 20 پیسے کی ہو گئی،گرم مصالحہ کی فی کلو قیمت میں 3روپے 17 پیسے بڑھ گئی،لکڑی کی فی من قیمت میں 7روپے 12پیسے کا اضافہ ہوا۔

رپورٹ کے مطابق آلو 8 روپے 74پیسے فی کلو سستے ہوئے،برائلر مرغی کی فی کلو قیمت میں 12روپے 39 پیسے کمی ہوئی، ٹماٹر کی فی کلو قیمت میں 10روپے 77 پیسے کی کمی ہوئی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More