عمران خان انسداد دہشتگردی عدالت پہنچ گئے

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان انسداد دہشت گردی عدالت پہنچ گئے۔ سیکیورٹی کے سخت انتظامات۔

انسداد دہشت گردی عدالت میں دہشت گردی کے مقدمے میں چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کی ضمانت کی درخواست پر سماعت ہوئی۔ جج نے تفتیشی افسر سے استفسار کیا کہ عمران خان تفتیش میں شامل ہوئے۔ جس پر تفتیشی افسر عدالت کو بتایا کہ عمران خان ابھی تک شامل تفتیش نہیں ہوئے، انہوں نے صرف ایک تحریری بیان بھیجا ہے۔ عدالت نے استفسار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ کیس میں ان کا بیان ہی چاہئے، اور کیا برآمدگی کرنی ہے، کیا عمران خان کا وہ بیان آپ نے رپورٹ کا حصہ بنایا۔ تفتیشی افسر نے جواب دیا کہ عمران خان کا وہ بیان رپورٹ کا حصہ نہیں بنایا گیا۔ عدالت نے کیس کے تفتیشی افسر پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ بیان ریکارڈ کا حصہ نہ بنانا آپ کی بدنیتی ظاہر کرتا ہے، کیا وہ بیان آپ نے تحفے کے طور پر رکھا ہوا ہے۔

عمران خان کے وکیل بابر اعوان نے عدالت میں مؤقف پیش کیا کہ اگر پولیس نے عمران خان سے تفتیش کرنی ہے تو بے شک جوڈیشل کمپلیکس کے بار روم میں تفتیش کرلے۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ پولیس چاہے تو عمران خان سے یہاں تفتیش کرسکتی ہے۔

عدالت نے حکم دیا کہ عمران خان عدالت پیش ہوں، اور فریقین آج ہی دلائل دیں، عدالت نے کیس کی سماعت میں وقفہ کردیا۔ وقفے کے بعد چیئرمین تحریک انصاف عمران خان عدالت پہنچ گئے، اس موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More