ایون فیلڈ ریفرنس: مریم نواز اورصفدر کی اپیلوں پر فریقین سےدلائل طلب

اسلام آباد ہائی کورٹ نے ایون فیلڈ ریفرنس میں لیگی رہنماء مریم نواز اور کپٹن ریٹائرڈ صفدر کی اپیلوں میں فریقین سے آئندہ سماعت پردلائل طلب کرلیے۔ عدالت نے کیس کی سماعت دو جون تک ملتوی کردی۔اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل دو رکنی بینچ نے ایون فیلڈ ریفرنس میں لیگی رہنماء مریم نواز اورکپٹن ریٹائرڈ صفدر کی اپیلوں پر سماعت کی۔

مریم نواز اورکیپٹن صفدر اپنے وکلاء عرفان قادر اور امجد پرویز کے ہمراہ پیش ہوئے۔ نیب کے خصوصی پراسیکیوٹرز امتیاز صدیقی نے کیس سے معزرت کرلی جبکہ اظہر صدیق لاہور ہائی کورٹ میں مصروفیت کے باعث پیش نہ ہوئے، عرفان قادر نے کہاکہ نیب کے نئے پراسیکیوٹرز نے گزشتہ سماعت پر تیاری کے لیے وقت مانگا،آج وہ دونوں بھی چلے گئے ہیں،عدالت سے استدعا ہے کہ دلائل مکمل ہو چکے ہیں، مزید تاخیر نہ کی جائے۔

جسٹس عامر فاروق نے کہاکہ آپ کی بات بالکل ٹھیک ہے شواہد نہ ہونے کی صورت میں بھی اس کا جائزہ لیں گے۔امجد پرویز ایڈووکیٹ نے کہاکہ دونوں درخواست گزار اس کیس میں ملزمان ہیں نوازشریف کا کیس تب دیکھا جائے گا، جب وہ واپس آئینگے، جون کے پہلے ہفتے سے اپیل پر سماعت شروع کرینگے۔ امید ہے 2 سے 3 ہفتے میں معاملہ نمٹا لینگے۔ فریقین اپنا اپنا گولہ بارود اکٹھا کرلیں۔

عرفان قادر ایڈووکیٹ نے کہاکہ نواز شریف کو ایک بار سہولت دی جائےتاکہ وہ واپس آجائیں اور پیش ہوں، نیب وکیل اس کی مخالفت کرتے کہا کہ یہ معاملہ ابھی عدالت کے سامنے ہے ہی نہیں۔جسٹس محسن اخترکیانی کا کہنا تھا کہ یہ ذہن میں رکھیں وکیل کی تبدیلی سے کوئی فرق نہیں پڑے گا۔ وکیل تبدیل ہو گا تو ہم اپیل کنندہ کو خود ہی سن لیں گے۔ عدالت ‏نے فریقین کوتیاری کیلئے وقت دیتے ہوئے سماعت 2 جون تک ‏ملتوی کردی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More