برطانیہ میں کسی پرکرپشن کا الزام لگ جائے تو وہ پارلیمنٹ میں نہیں بیٹھ سکتا، وزیراعظم

اسلام آباد:وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ ملا لیا تو اس کامطلب ہے میں نے ان کی کرپشن کو تسلیم کرلیا۔

اسلام آباد میں تقریب سے خطاب میں وزیراعظم نے کہا کہ آج کے پاکستان میں اسکالرز کی بہت ضرورت ہے۔عالم کا بہت بڑا رتبہ ہوا کرتا ہے۔ اسکالرز قوم کے نظریے کی حفاظت کرتے ہیں اور اگر اسکالرز راستہ بھول جائیں تو قوم کا نقصان ہوتا ہے۔ اسلام فکری انقلاب سے پھیلا مگر مقام افسوس ہے کہ لوگوں کو اسلامی تاریخ کا پتہ نہیں۔ اسلام کی تاریخ کا پوچھیں تو انہیں جنگیں یاد ہوتی ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ جب قوم اچھے برے کی تمیز ختم کر دیتی ہے تو مر جاتی ہے۔ کرپشن کی وجہ سے ہمارا مورال بری طرح گرا ہے۔سینیٹ میں پیسے چلتے ہیں اور لوگ ادھر سے ادھر ہو جاتے ہیں۔ مغرب میں کوئی پیسے لے کر دوسری جماعت میں نہیں جاتا۔ انگلینڈ میں کسی پر کرپشن کا الزام لگ جائے تو مجال ہے وہ پارلیمنٹ میں بیٹھ جائے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ سب لوگ کہتے ہیں آپ کیوں دو بڑے خاندانوں کے پیچھے پڑے رہتے ہیں بلکہ میری تو ماضی میں ان سے دوستی ہوا کرتی تھی۔ میں کرپشن کے خلاف لڑتا ہوں میری کسی سے ذاتی دشمنی نہیں ہے۔ مجھے کہتے ہیں آپ اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ نہیں ملاتے ہیں ۔ اس پر اربوں کے کیسز ہیں اگر اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ ملا لیا تو اس کامطلب ہے میں نے ان کی کرپشن تسلیم کرلی ۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More