گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں سیلاب کے باعث 75 افراد جاں بحق

پاکستان میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران بارش کے باعث سیلاب سے 75 افراد اپنی جان کی بازی ہار گئے۔

نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی جانب سے جاری آج کی رپورٹ کے مطابق مزيد 75 افراد زندگى کى بازى ہار گئے، سندھ ميں 53، خيبرپختونخوا میں 16 افراد، بلوچستان میں 2، گلگت بلتستان میں 5 افراد اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے جبکہ 59 افراد زخمى ہوئے۔

جون کی 14 تاریخ سے اب تک ملک بھر میں کل 1136 افراد جان بحق ہوئے۔ سب سے زیادہ ہلاکتیں سندھ میں ہوئیں جس میں 402 افراد، بلوچستان 244، کے پى 258، آزاد کشمير 41 افراد ہلاک ہوئے۔ ہلاک شدگان میں 501 مرد، 227 خواتين اور 386 بچے شامل ہیں۔ زخميوں کى تعداد 1634 تک پہنچ گئی، سندھ میں زخمى افراد کی تعداد بھی سب سے زیادہ ہے جہاں 1055، کے پى 338، پنجاب 105، بلوچستان میں 110 افراد زخمى ہوئے۔ ملک بھر میں 7 لاکھ 35 ہزار 375 مال مویشی سیلاب میں بہہ گئے۔

بارش اور سیلابی ریلوں سے 734179 مکانات جزوی اور 317391 مکمل طور پر تباہ ہوگئے۔ ملک بھر کے 162 پلوں کو سيلاب سے نقصان پہنچا ہے۔

دریائے سندھ میں اونچے درجے کا سیلاب ہے، چشمہ، تونسہ، گڈو اورسکھر بیراج پر اونچے درجے کا سیلاب ہے،دریائے کابل نوشہرہ کے مقام پر انتہائی اونچے درجے کا سیلاب ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More