پورے ملک کو ایک گھنٹے سے کم وقت میں جام کر دیا، فضل الرحمان

اسلام آباد: جمعیت علماء اسلام فے کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ پارلیمنٹ لاجز سے ایم این ایز اور کارکنوں کی گرفتاری کے بعد پورے ملک کو ایک گھنٹے سے کم وقت میں جام کر دیا۔

آڈیو پیغام میں مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ اسلام آباد پولیس نے تمام قوانین اور اخلاقیات کو روندتے ہوئے پارلیمنٹ لاجز میں دھاوا بولا، ممبران پارلیمنٹ پر بلا جواز تشدد کیا گیا اور قوم کے منتخب نمائندوں کو گھسیٹتے ہوئے گرفتار کیا گیا، پارلیمنٹ لاجز میں مہمانوں کو بھی زد و کوب اور گرفتار کیا گیا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ واقعے کی غلط تصویر اور جھوٹ پر مبنی بیانیہ قوم کے سامنے رکھا گیا، تاریخ کے صفحات پر اپنے سیاہ کردار کی پردہ پوشی کی بھونڈی کوشش کی گئی۔

جے یو آئی اور دیگر جماعتوں کے کارکنوں اور عوام کا شکریہ ادا کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ پورے ملک کو ایک گھنٹے سے کم وقت میں جام کر دیا، کارکنوں اور عوام کو اس فتح پر مبارکباد پیش کرتا ہوں، صبح ہونے سے پہلے ہی تمام ممبران قومی اسمبلی اور کارکن رہا ہوچکے ہیں، رہائی نہ ملنے کی صورت میں ہم نے دوبارہ سڑکوں پر آنے کا فیصلہ کیا تھا، اب کارکنوں کی رہائی کے لیے سڑکوں پر آنے کی ضرورت باقی نہیں رہی۔سربراہ جے یو آئی ف کا کہنا تھا کہ جمعہ کے اجتماعات میں شکرانے کے نوافل ادا کریں، آئندہ بھی اللہ سے فتح و نصرت کے لیے اجتماعی، انفرادی دعاؤں کا اہتمام کریں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More