ووٹ کے تحفظ کیلئے متفقہ الیکشن ایکٹ ناگزیر ہے، اسفند یار ولی

پشاور: عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیارولی خان نے کہا ہے کہ آزاد اور شفاف انتخابات، عوام کے ووٹ کو محفوظ کرنے کیلئے متفقہ الیکشن ایکٹ ناگزیر ہے۔انتخابات پر ہمیشہ پارلیمانی جماعتوں اور عوام نے اعتراضات اٹھائے ہیں، یہ سلسلہ تاحیات بند ہونا چاہئیے۔عوام کا مطالبہ ہے کہ انتخابات آزاد، شفاف اور بغیر کسی مداخلت کے ہو۔

الیکشن ایکٹ 2017ترامیم پر ردعمل دیتے ہوئے اے این پی سربراہ اسفندیار ولی خان کہنا تھا کہ کمزور اور مداخلت سے بھرا انتخابی عمل ملک میں انتشار پھیلانے کا باعث بنا ہے۔تمام سیاسی جماعتوں اور ووٹرز کی تجاویز کی روشنی میں متفقہ الیکشن ایکٹ بنایا جائے۔سیاسی جماعتوں نے اپنی تجاویز دی ہیں، پارلیمنٹ میں بحث کے بعد ایسے قوانین بنائے جائیں جس پر سب کو اعتماد ہو اور جس کا سب احترام کریں۔ایسا الیکشن ایکٹ جو ووٹ کے تحفظ کی ضمانت ہو۔

اسفندیارولی کاکہنا تھا کہ آزاد ماحول میں جمہوری حق استعمال کرنا عوام کا بنیادی آئینی حق ہے۔حکومت بنانے کا اختیار صرف اور صرف عوام کے پاس ہے۔وقت آگیا ہے کہ تمام ادارے پاکستان کے آئین میں درج اختیارات استعمال کریں۔پاکستان کے تمام مسائل کا حل صرف اور صرف جمہوریت ہے، جمہوری نظام ملک اور عوام کے مفاد میں ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More