سیالکوٹ جیسے واقعات کی روک تھام کیلئے قانون سازی کی ضرورت ہے، قبلہ ایاز

اسلام آباد: اسلامی نظریاتی کونسل نے سانحہ سیالکوٹ میں ملوث ملزمان کو قرار واقعی سزا دینے کی سفارش کر دی ۔اسلامی نظریاتی کونسل کے چئیرمین قبلہ ایاز کا کہنا ہے کہ ملزمان کو ملی سزا نظر بھی آنی چاہیے ۔

سانحہ سیالکوٹ پر اسلامی نظریاتی کونسل کے خصوصی اجلاس کے بعد وزیر اعظم کے معاون خصوصی طاہر اشرفی کے ہمراہ میڈیا بریفنگ میں قبلہ ایاز نے کہا کہ اس طرح کے واقعات کی روک تھام کیلئے موثرقانون سازی کی ضرورت ہے اورقانون کی موجودگی سے بڑا مسئلہ اس پر عمل درآمد ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملک کے عدالتی نظام میں اصلاح کی گنجائش موجود ہے۔حکومت نے اس واقعہ پر بروقت اقدامات سے پاکستان اصل امیج سامنے آیااور جمیعت علماء سری لنکا کی طرف سے بھی پاکستانی موقف کا شکریہ ادا کیا گیا۔او آئی سی اجلاس نے بھی پاکستان کے اقدام پر تشکر کا اظہار کیا۔

قبلہ ایاز نے کہا کہ ماہرین کے ساتھ آئندہ ایسے واقعات کو روکنے کے لئے مباحثہ جاری رکھا جائے گا ۔سوشل میڈیا پر بہت سا مواد ایسا موجود ہے جو تشدد کو فروغ دے رہا ہے ۔کونسل اجلاس نے عوام کو قانون ہاتھ میں لینے سے باز رہنے کی اپیل کی ہے ۔قانون ہاتھ میں لینا اسلام قانون اور اخلاقیات سب کے خلاف ہے ان کا کہنا تھا کہ اسلامی نظریاتی کونسل کے اعلامیہ پر پارلیمنٹ میں بحث کی جائے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More