چوہدری براداران کا سیاسی راستے جدا کرنے کا فیصلہ

مسلم لیگ (ق) سیاسی معاملات پر اختلافات کا شکار ہے اور چودھری برادران نے سیاسی طور پر ایک دوسرے سے اپنے راستے الگ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق مسلم لیگ (ق) سیاسی معاملات پر اختلافات کا شکار ہوگئی۔چوہدری شجاعت حسین، چوہدری سالک حسین مسلم لیگ (ن) کے ساتھ کھل کر کھڑے ہوگئے جبکہ چوہدری پرویز الٰہی، مونس الٰہی اور چوہدری حسین الٰہی تحریک انصاف کے اتحادی رہیں گے ۔

ذرائع نے مزید بتایا کہ خاندانی اختلافات میں شدت کے باعث سیاسی معاملات پر راہیں جدا کی گئیں۔ تاریخ میں پہلی بار خاندان کے دونوں بڑوں نے الگ الگ سیاسی راستون کا اعتراف کر لیا جبکہ دوریاں بڑھنے کے باعث جلد حتمی فیصلے کا امکان ہے۔

چوہدری خاندان کے تین ایم این ایز میں سے دو تحریک انصاف کے حامی ہیں۔ حسین الٰہی کی وطن واپسی پر بڑا فیصلہ ہونے کا امکان ہے ۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More