سابق ایم این اے اور کالم نگار بشری رحمان انتقال کرگئیں

سابق ایم این اے اور کالم نگار بشری رحمان جہانِ فانی سے کوچ کرگئیں،ان کی عمر اٹھتہر برس تھی۔ دو ہزار سات میں انہیں صدارتی اعزاز ستارہ امتیاز سے نوازا گیا۔ بشریٰ رحمان کی قومی اور ادبی خدمات پر دیکھتے ہیں۔

انتیس اگست انیس سو چوالیس میں بہاولپور میں آنکھ کھولنے والی بشری رحمان نے جامعہ پنجاب سے ایم اے صحافت کیا۔ سیاسی سفر 1983 میں شروع کیا اور پنجاب اسمبلی سے منتخب ہوئیں اور مسلم لیگ ق کی طرف سے قومی اسمبلی کی رکن بھی رہیں۔ بشریٰ رحمٰن نے 13سےزائد کتابیں لکھیں اور طویل عرصےتک کالم بھی لکھتی رہیں۔

مرحومہ نے پی ٹی وی اور پرائیویٹ پروڈکشن کے لئے کئی ڈرامے لکھے،ان کے ناول اور ا فسانے خواتین میں بہت مقبول تھے۔ بشریٰ رحمان کے افسانوں کے کئی مجموعے شائع ہوچکے ہیں۔ ان کے معروف ناولز میں اللہ میاں جی،بہشت، براہ راست،بت شکن چاند سے نہ کھیلو اور چارہ گر شامل ہیں۔ دو ہزار سات میں انہیں صدارتی اعزاز ستارہ امتیاز سے نوازا گیا۔ بشریٰ رحمن کی شادی لاہور کے صنعتکار میاں عبدالرحمٰن سے ہوئی تھی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More