بھارت میں حجاب نہ اترنے پر بینک نے مسلم لڑکی کو پیسے نہ دیئے

نئی دہلی: بھارت میں مسلمانوں اور خصوصا خواتین کی زندگی دن بدن دشوار ہونے لگی ۔ہندو انتہا پسندوں کی جانب سے مسلم خواتین کو بے حجاب کرنے کی مہم کرناٹکہ سے اب دیگرریاستوں میں بھی پھیلائی جارہی ہے۔

بھارت میں مسلمانوں کے لیے روز ایک نیا امتحان جنم لینے لگا ہے ۔ سیکیولر بھارت انتہا پسند ہندو ریاست میں تبدیل ہوتی جا رہی ہے ۔ کرناٹک کے بعد مسلم خواتین کو بے حجاب کرنے کی مہم آہستہ آہستہ تمام بھارت میں پھیلتی جا رہی ہے ۔ سوشل میڈیا پر وائرل ایک فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک بینک میں عملے کی جانب سے لڑ کی کو حجاب نہ اترنے پر پیسے دینے کا انکار کردیا ۔

بھارتی ریاست بہار میں ایک بینک میں حجاب پہن کرآنے والی مسلمان لڑکی کو بینک کے عملے نے حجاب اتارنے تک پیسے دینے انکار کردیا تاہم لڑکی نے بے حجاب ہونے سے انکار کردیا۔ یہ واقعہ بہاربیگوسرائے منصورچک کے بینک میں پیش آیا۔واقعے کی فوٹیج سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More