بلوچستان کے صوبائی وزیرنورمحمد دمڑ نے وزارت سے استعفیٰ دے دیا

کوئٹہ: بلوچستان اسمبلی میں باپ پارٹی کے رکن اور صوبائی وزیرنورمحمد دمڑ نے اپنی وزارت سے استعفیٰ دے دیا۔ نور محمد دمڑ نے کہا کہ وزیر اعلیٰ کے پاس پہلے ہی بہت سے محکمے ہیں یہ محکمہ بھی ان کے حوالے کردیا ہے ۔

میڈیا نمائندوں سے گفتگو میں مستعفی صوبائی وزیر نور محمد د مڑ نے کہا کہ پہلے وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کے ساتھ تھا لیکن انھوں نے پارٹی قیادت کے فیصلوں کی خلاف ورزی کی ۔میں نے اپنی پارٹی کو بچانے کے لئے استعفی دے رہا ہوں۔

نور محمد دمڑ نے کہا کہ وزیر اعلیٰ کے پاس پہلے ہی بہت سے محکمے ہیں اب یہ محکمہ بھی ان کے حوالے کررہا ہوں ۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کی جانب سے تحریک عدم اعتماد کا حصہ نہ بننے کی وجہ وزیر اعلیٰ کو موقع فراہم کرنا تھا تاہم ایک ماہ کی مہلت کے باوجود وزیر اعلی کے رویئے میں تبدیلی نہیں آئی۔

نور محمد دمڑ نے کہا کہ وزیر اعلیٰ نے پہلے ٹوئٹر پر استعفیٰ دیا پھر بچگانہ حرکت کرکے واپس لیا جبکہ سردار عبدالرحمن کھیتران کا کہنا تھا کہ آج ایوان میں واضح ہوگیا کہ وزیر اعلی کے ساتھ کوئی نہیں ہے ۔ تحریک عدم اعتماد آج ہی کامیابی ہوگیا اب 25 اکتوبر کا دن وزیر اعلی کے جانے کا دن ہوگا۔ وزیر اعلی بلوچستان استعفیٰ دیکر سیاسی بحران کا خاتمہ کرسکتے ہیں ۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More