تازہ ترین
اٹلانٹا اور کیلی فورنیا میں 2 سیاہ فام افراد قتل،عوام میں غم و غصہ

اٹلانٹا اور کیلی فورنیا میں 2 سیاہ فام افراد قتل،عوام میں غم و غصہ

اٹلانٹا: (14 جون 2020) امریکی پولیس نے فائرنگ کر کے ایک اور سیاہ فام کو قتل کردیا۔ ستائیس سالہ ریشارڈ بروکس ریستوران میں پارک گاڑی میں سو رہا تھا۔ کیلی فورنیا میں سیاہ فام شخص کی لاش درخت سے لٹکتی ہوئی ملی۔

امریکا میں نسلی امتیاز۔مظالم اور تعصب کے خلاف احتجاجی تحریک زور پکڑنے لگی۔ اٹلانٹا اور کیلی فورنیا میں دو سیاہ فام افراد کو قتل کردیا گیا جس کے باعث عوام میں غم و غصہ ہے۔ اٹلانٹا میں امریکی پولیس نے فائرنگ کر کے ایک اور سیاہ فام کو قتل کردیا۔ ستائیس سالہ ریشارڈ بروکس ریستوران میں پارک گاڑی میں سو رہا تھا۔ پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ ریشارڈ نے نشے نہ ہونےکا ٹیسٹ دینے سے انکار اور گرفتار کرنے پر مزاحمت کی تھی۔ سیاہ فام شہری کے قتل پر اٹلانٹا پولیس کی سربراہ مستعفی ہوگئیں۔

دوسری جانب کیلی فورنیا میں سیاہ فام شخص کی درخت سے لٹکی لاش ملی۔امریکی حکام نے واقعے کو خودکشی کا رنگ دینے کی کوشش کرتے ہوئے کہا ہے کہ چوبیس سالہ رابرٹ فلر نے اپنی جان خود لی ہے۔

دو مزید سیاہ فام افراد کے قتل کے بعد احتجاج کی لہر شدت اختیار کرگئی۔مینا پولس میں امریکی پولیس کے ہاتھوں جارج فلویڈ کے بے رحمانہ قتل کے بعد پورے امریکا میں احتجاجی تحریک شروع ہوئی تھی۔

Comments are closed.

Scroll To Top