چاہتا ہوں کہ یہ حکومت پہلے دن چلی جائے،آصف زرداری

احتساب عدالت اسلام آباد نے سابق صدر آصف زرداری کی نیو یارک پراپرٹی کیس میں درخواست ضمانت قبل از گرفتاری پر پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔ آصف زرداری بولے چاہتا ہوں کہ یہ حکومت پہلے دن چلی جائے۔ تاریخ نے ثابت کیا کہ یہ نا معقول ہیں ان سے حکومت نہیں چلائی جائے گی۔

احتساب عدالت اسلام آباد کے جج محمد بشیر نے سابق صدر آصف علی زرداری نیو یارک پراپرٹی کیس میں ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست پر سماعت کی۔ سماعت کے دوران سابق صدر آصف زرداری کے وکیل فاروق نائیک کا کہنا تھا کہ نیو یارک پراپرٹی کیس کی نیب تحقیقات کر رہا ہے۔ نیب نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ابھی تک وارنٹ گرفتاری جاری نہیں کئے۔ چیئرمین نیب کو کسی کو بھی گرفتار کروانے کا اختیار ہے، چیئرمین نیب انکوائری کے کسی بھی مرحلے پر گرفتاری کے وارنٹ جاری کر سکتا ہے۔ ہمیں کوئی شوق نہیں ہے عدالت میں آنے کا، کسی کو خطرہ ہوتا ہے تو اپنے آپکو محفوظ رکھنے کیلئے عدالت کا رخ کرتا ہے۔

نیب پروسیکیوٹر نے ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے کہاکہ نیب نے اپنے بیان میں وضاحت کر دی ہے، احتساب عدالت آصف زرداری کی درخواست کو مسترد کرے۔ فاروق نائیک نے کہاکہ نیب کا گرفتاری کا اگر کوئی ارادہ نہیں ہے تو بتائیں،جب انکوائری چل رہی ہے تو نیب واضح کیوں نہیں کرتا، فاروق نائیک نے سابق صدر آصف زرداری کی میڈیکل رپورٹس بھی عدالت میں پیش کرتے ہوئے کہاکہ عدالت آصف زرداری کی مستقل ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست منظور کرے۔ نیب پروسیکیوٹر نے کہاکہ نیب نے جب وارنٹ گرفتاری جاری نہیں کئے تو درخواست مسترد کی جائے، عدالت نے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا۔

سابق صدر آصف علی زرداری نے عدالت پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان ہاؤس تبدیلی سے متعلق سوال پر کہاکہ انشا اللہ بہتر ہوگا۔ پیپلز پارٹی کے دوبارہ پی ڈی ایم کا حصہ بننے سے متعلق سوال پر آصف زرداری نے کہاکہ نہیں معلوم لیکن میں ایسا نہیں سمجھتا ہوں،میں تو چاہتا ہو کہ یہ حکومت پہلے دن چلی جائے یہ نا معقول ہیں، ان سے حکومت نہیں چلے گی اور اب تاریخ نے بھی اسے ثابت کر دیا ہے۔ سابق صدر کے مطابق مولانا فضل الرحمن پہلے بھی مارچ کرتے رہے ہیں، جو عوام کے حالات ہیں ان میں حکومت سے کچھ نہیں ہو سکتا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More