آصف زرداری اور فواد چوہدری کی نااہلی کی درخواستوں پرقانونی معاونت طلب

اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق صدرآصف زرداری اور وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کی نااہلی کےلیے درخواستوں پراہم قانونی نکتے پرمعاونت طلب کرلی۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیئے کہ عدالت کیوں منتخب نمائندوں کے ان معاملات میں پڑے۔ عدالتوں پر پہلے ہی مقدمات کا بوجھ ہے یہ پارلیمنٹ کا معاملہ ہے پارلیمنٹ اپنا احتساب خود کرے۔

دوران سماعت فواد چوہدری کے وکیل بھائی فیصل چوہدری پیش ہوئے۔ درخواست گزار سمیع ابراہیم پیش نہ ہوئے۔ فیصل چوہدری نے کیس عدم پیروی پر خارج کرنے کی استدعا کی جس پرچیف جسٹس اطہرمن اللہ نے کہا کہ درخواست گزارکو آئندہ سماعت پرآنے دیں پھر دیکھتے ہیں۔ عدالت ان کیسز کے میرٹس پر نہیں جائے گی پہلے قابل سماعت ہونے پر دلائل دیں۔ اب عدالت ہمیشہ کے لیے ان پٹشنز کا فیصلہ کرنا چاہتی ہے۔

آرٹیکل 199 کے تحت عدالت کو کیوں ان پٹشنز کو سننا چاہیئے ہم کوئی سپیریئر تو نہیں یہ عوامی نمائندے ہیں ان کا خود احتسابی کا اپنا نظام ہونا چاہیئے۔ عدالت نے وکلا سے معاونت طلب کرتے ہوئے کہا کہ آئندہ سماعت پر درخواست قابل سماعت ہونے پر دلائل دیں۔ کیس میں مزید التوا نہیں دیا جائے گا کیس کی دوبارہ سماعت نو دسمبر کو ہوگی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More