نئے بلدیاتی بل کے خلاف کی اپوزیشن جماعتیں متحد ہو گئیں

کراچی: سندھ اسمبلی سے پاس ہونے والے نئے بلدیاتی بل کے خلاف اپوزیشن جماعتیں متحد ہو گئیں ۔

وفاقی وزیر اسد عمر کہتے ہیں جب تک عوام بااختیار نہیں ہوگی ملک کے بنیادی مسائل حل نہیں ہونگے،یہ مسئلہ کسی سیاسی جماعت کا نہیں، ایسا نظام ہونا چاہیے کہ جو منتخب ہو وہ مجبور ہو کام کرنے کے لیے۔

وفاقی وزیراسدعمر نے آل پارٹیز کانفرنس سے خطاب میں کہا کہ سندھ کے حکمران مزید امیر ہورہے ہیں، نظام کا برا حال ہے۔ صوبوں کو اختیار دینے سے مسائل حل نہیں ہوتے۔ چاہتے ہیں ایسا نظام بنائیں جو بھی منتخب ہوکرآئے اپنے علاقے کے مسائل خود حل کرسکے۔

ایم کیو ایم رہنما سابق مئیر کراچی وسیم اختر نے کہا کہ وزیراعلیٰ سندھ کے پاس کوئی ویژن نہیں ہے۔ انہوں نے کچھ کرنا ہوتا تو لاڑکانہ اور نوابشاہ آج بنے ہوئے ہوتے۔ انہیں تیرہ سال سے بارہ سوارب روپے مل رہے ہیں۔

اس موقع پر پی ٹی آئی رہنما خرم شیر زمان کا کہنا تھا کہ کراچی کا نظام جاگیردارانہ نہ ہو۔ پولیس اور ٹرانسپورٹ کا نظام مئیر کے پاس ہوناچاہیے۔ تقریب سے مختلف سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں نے خطاب کیا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More