افغانستان اور میانمار کو جنرل اسمبلی میں نمائندے بھیجنے کی اجازت نہیں ملی

نیویارک: افغانستان اور میانمار کی نئی حکومتوں کو مستقبل قریب کے لیے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں نمائندے بھیجنے کی اجازت نہیں دی گئی۔

غیرملکی خبرایجنسی کے مطابق طالبان کے نمائندوں یا سابق برما کی فوجی حکومت کو 193 ریاستوں کے گروپ میں شامل کرنا بین الاقوامی شناخت کی طرف ایک قدم ہو گا۔ ان دونوں ممالک کے اقوام متحدہ میں سابق سفیروں کو ہی اپنا کام جاری رکھنے کا کہا گیا ہے۔ اقوام متحدہ کی متعلقہ کمیٹی موسم خزاں 2022ء سے پہلے اس مسئلے پر دوبارہ بات چیت کرے گی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More